چھٹی اور آٹھویں کلاس کی 88 لڑکیوں کو سب کے سامنے کپڑے اتار دینے کی شرمناک سزا

چھٹی اور آٹھویں کلاس کی 88 لڑکیوں کو سب کے سامنے کپڑے اتار دینے کی شرمناک سزا۔  بھارت کے ضلع پاپم پارے میں واقع کستربا گاندھی بلیکا ودیالا میں 23 نومبر کو پیش آنے والے اس واقعے میں لڑکیوں کو کپڑے اتارنے کا حکم دیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں: سکندر اعظم پوری دنیا فتح کرنے نکل پڑالیکن اس کے ناقابل شکست کے پیچھے چھپا راز تاریخ کا ایک اہم ورق

یہ شرمناک واقعہ رواں ماہ کے اوائل میں بھارتی ریاست اروناچل پردیش میں پیش آیا ۔ کچھ لڑکیوں نے ٹیچر کے بارے میں نازیبا حرکات کیں جس بنا پر لڑکیوں کو دوسرے سب کے سامنے کپڑے اتارنے کی سزا دی گئی ۔ جن طالبات کی سزا دی گئی وہ چھٹی اور آٹھویں کلاس کی تھیں اور ان کی تعداد 88 تھی ۔ انہیں سب کے سامنے ننگا کر دیا گیا ۔ چار روز بعد طلباء کی یونین نے ایف آئی آر درج کرا دی جس بنا پر یہ واقعہ میڈیا کے سامنے آگیا ۔

یہ بھی پڑھیں: شریف خاندان کے زوال کے بعد قطریوں سے پاکستان میں کیا سلوک کیا گیا ، اختلافات سامنے آگئے

پریس ریلیز میں بتایا گیا کہ اساتذہ کو ایک کاغذ کا ٹکڑا ملا جس میں ہیڈ ٹیچر اور استاد سے متعلق نازیبا الفاظ تحریر تھے جس پر ٹیچر نے یہ غلطی کرنے والے طالبعلم کو سامنے آنے کا حکم دیا لیکن طلبا کی جانب سے کوئی جواب نہ ملنے پر انہوں نے یہ شرمناک سزا تجویز کی۔

Comment

About Us

pakistaninfopoint.com covers Latest Breaking News, Pakistan News, World News, Health News, Available Jobs Lists, students relating infomations and different kind of information about pakistan. pakistaninfopoint.com also cover Latest Technology Updates, Dubai and Saudi Arabia News.

© 2017 - Pakistan Info Point